0

بارش سے فلسطینیوں کی مشکل میں اضافہ،پیروں سے زمین اور سر سے آسمان بھی کھیسکنے لگا

شمالی غزہ میں جبالیہ پناہ گزین کیمپ کے مغرب میں الفلوجہ کے علاقے میں واقع شادیہ ابو غزالہ اسکول کے اندر لاشوں کا ڈھیر لگا ہوا ہے۔اسرائیل کے شدید حملوں کی وجہ سے فلسطینیوں کی اموات میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے .حالیہ شدید بارش کی وجہ سے ان میتوں کو دفنانے کے انتظامات بھی نہیں ہو پا رہے.جس سے بیماریوں کے پھیلنے کا بھی خطرہ موجود ہے.
بارش نے غزہ کی پٹی کے کچھ حصوں میں سیلاب کو جنم دیا کیونکہ تیز ہواؤں نے عارضی خیموں کو نقصان پہنچایا، جس سے اسرائیل کی جنگ سے بے گھر ہونے والے فلسطینی خاندانوں کو درپیش چیلنجز میں اضافہ ہوا ہے، اور امدادی کاموں میں بھی تعطل آرہا ہے.جس کے باعث غزائی قلت کا مسئلہ بھی فلسطینیوں کے سر پر تلوار بن کے لٹک رہا ہے.
اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ گولانی انفنٹری بریگیڈ کے فارورڈ بیس کی کمانڈ کرنے والے کرنل سمیت اس کے 10 فوجی غزہ کی پٹی میں مارے گئے ہیں۔
7 اکتوبر سے اب تک اسرائیلی حملوں میں کم از کم 18,608 فلسطینی مارے جا چکے ہیں۔ اسرائیل میں مرنے والوں کی نظر ثانی شدہ تعداد 1,147 ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں