0

کاپی رائٹ تنازع، امریکا میں ایپل واچ کی فروخت پر عائد پابندی معطل

کیلیفورنیا: امریکا میں ایپل واچ کی فروخت پر عائد کی جانے والی پابندی عدالت نے معطل کر دی۔ منگل کے روز امریکا کی کورٹ آف اپیلز میں دائر کی جانے والی درخواست پر کارروائی کرتے ہوئے عدالت نے فروخت کو جاری رکھنے کا حکم دیا۔

24 دسمبر کو امریکی حکومت کے ایک ٹریبیونل نے امریکا میں ایپل واچ کے تازہ ترین ورژن کی فروخت پر کاپی رائٹ تنازع کے سبب پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

ایپل واچ پر یہ پابندی میڈیکل مانیٹرنگ ٹیکنالوجی کمپنی میسِمو کی جانب سے درج کی جانے والی شکایت کے نتیجے میں عائد کی گئی تھی۔

کمپنی کی جانب سے مؤقف اپنایا گیا ہے کہ ایپل نے اپنی نئی گھڑیوں میں بلڈ آکسیجن کے سینسر دے کر میسمو کے پیٹنٹس کو بغیر اجازت استعمال کیا ہے۔

ایپل کو امید تھی کہ امریکی صدر جو بائیڈن کی انتظامیہ حکومتی ٹریبیونل کی جانب سے گھڑیوں کو برآمد کرنے پر عائد کی جانے والی اس پابندی کو ویٹو کر دے گی لیکن حکومت کی جانب سے پابندی کے خلاف کوئی اقدام نہیں کیا گیا۔

جس کا مطلب تھا کہ کمپنی امریکا میں گھڑی فروخت نہیں کر سکے گی۔ البتہ، ایمازون اور ٹارگیٹ جیسے ریٹیلرز کے پاس پہلے سے موجود اسٹاک فروخت کے لیے دستیاب ہوگا۔

واضح رہے ایپل کی جانب سے امریکا کی کورٹ آف اپیلز میں پابندی ہٹانے کے لیے منگل کے دن ایمرجنسی درخواست دائر کر دی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں